COVID19 کے خلاف ویکسینیشن

کووڈ 19 کی قومی حفاظتی مہم شروع ہو چکی ہے۔ حفاظتی ٹیکے سب کے لیے مفت ہیں اور بتدریج ترجیحی گروہ کے مطابق سب کو فراہم کئے جائیں گے۔

ویکسینیشن تک رسائی کس طرح کی جائے،  کے بارے میں معلومات کے لئے یہاں کلک کریں۔

اپنی حفاظت کریں،  دوسروں کو محفوظ بنائیں،  ویکسین لگوائیں۔

کووڈ 19 کے خلاف حفاظتی ٹیکہ کس طرح کام کرتا ہے ؟

حفاظتی ٹیکے کی کاروائی ( اثر ) کا دارومدار ذاتی مدافعتی نظام ( جسم کی قدرتی قوت ) کی مخصوص بیماری کی شناخت اور اس کے خلاف محفوظ ہونے پر ہے۔

قوت مدافعت بڑھانا : کووڈ 19 کے خلاف ویکسینیشن پر کی گئی تحقیق میں ایک پروٹین ( مکمل یا کچھ حصہ ) کے خلاف ردعمل پیدا کرنا شامل ہے،  جو کہ صرف کووڈ 19 کی وجہ سے بننے والے وائرس میں پایا جاتا ہے۔ جب ایک فرد کی ویکسینیشن ہوتی ہے تو مدافعتی ( قوت ) پیدا ہوتی ہے۔ کووڈ 19 کے خلاف مدافعتی قوت بنانے کے لیے زیادہ تر ویکسینیشن کی دو خوراکوں کی ضرورت ہوتی ہے۔

اگر کوئی حفاظتی ٹیکہ لگوانے کے بعد بھی وائرس کا شکار ہو جاتا ہے، تو حفاظتی نظام وائرس کو پہچاننے کے قابل ہوتا ہے، اور پہلے ہی حملہ کرنے کے لئے تیار ہوتا ہے۔

حفاظتی ٹیکہ کس طرح کام کرتا ہے،  اس کے متعلق مزید معلومات مندرجہ ذیل ویب سائٹ پر (صرف یونانی زبان میں ) دستیاب ہیں:

https://emvolio.gov.gr/plirofories

ویکسین لگوانے کے کیا فوائد ہیں ؟

عوام کو ضرررساں بیماری سے محفوظ رکھنے کے لئے ویکسین ایک سادہ،  محفوظ اور موثر طریقہ ہے۔

کووڈ 19 ویکسین مدافعتی نظام کے ذریعے ہمیں سارس کوو 2 وائرس سے بچاتی ہے،  جو کہ کووڈ 19 کا باعث بنتا ہے۔

یہ مدافعتی نظام اس وائرس کا سامنا ہونے پر اس کے خلاف لڑنے میں آپ کی مدد کرتا ہے،  اس کا مطلب یہ بھی ہے کہ آپ اپنے اردگرد موجود لوگوں کی بھی حفاظت کرتے ہیں۔ اگر آپ نے ویکسین لگوائی ہے، تو آپ کی وجہ سے دوسرے لوگوں میں انفیکشن پھیلنے کا خطرہ ڈرامائی انداز میں کم ہو جاتا ہے ۔ یہ خاص طور پر ان کے لئے ہے جو کہ کووڈ 19 سے بیمار ہونے کے خطرے سے زیادہ دوچار ہیں، مثلا صحت کے رضاکار، بزرگ اور وہ لوگ جو مختلف طبی مسائل کا شکار ہیں۔

حالیہ معلومات کے مطابق،  ویکسین کے بعد کووڈ 19 سے 6 سے 8 ماہ تک محفوظ رہنے کا امکان ہے۔ کوئی بھی ویکسین سو فیصد محفوظ نہیں ہے، لیکن ویکسین لگنے کے بعد کووڈ 19 سے متاثر ہونے کا امکان بہت کم ہے۔ لہذا یہ ضروری ہے کہ آپ تمام حفاظتی اقدامات اختیار کئے رکھیں سماجی فاصلہ،  ماسک کا استعمال اور بکثرت ہاتھ دھونا۔ جب آبادی کا ایک بڑا حصہ ( تقریبات 70 % سے 85 % تک ) ویکسین لے چکا ہو گا، تب ہی کووڈ 19 کے خلاف استحکام پیدا ہو گا۔

کس کو ویکسین لینی/ نہیں لینی چاہیے ؟

کووڈ 19 کی یونانی قومی مہم کے تحت حالیہ مقصد یہ ہے کہ 18 سال سے اوپر کے ہر فرد کو ویکسین لگائی جائے۔ طبی ماہرین ہی صحیح مشورہ دے سکتے ہیں کہ انفرادی طور پر ویکسین لگوانی چاہیے یا نہیں۔ جن افراد کو تھروم بوسس یا شدید قسم کی الرجی ہو ان کو پہلے ڈاکٹر سے بات کرنی چاہئے۔

آج تک کوئی ثبوت نہیں ملا کہ کووڈ 19 ویکسین کی وجہ سے حاملہ ہونے کے امکان پر کوئی اثر پڑا ہو۔ ویکسین کے بعد حاملہ ہونے سے بچنا ضروری نہیں ہے۔

شہادتوں کی بنا پر، جن لوگوں کو کووڈ 19 ویکسین کے کسی جز سے شدید قسم کی الرجی ہو، تو ان کو کووڈ ویکسین سے بچنا چاہئے تاکہ ان کی صحت پر برے اثرات نہ پڑیں ۔ اس صورت میں کہ اگر آپ کو دوائی سے الرجی ہے تو ویکسین سے پہلے طبی عملہ کو آگاہ کریں ۔ اگر آپ بیمار ہیں یا کووڈ 19 کے آثار پائے جاتے ہیں تو ابتدائی اثرات کے ختم ہونے کے بعد آپ ویکسین لے سکتے ہیں ۔

اگر کووڈ 19 ہو چکا ہے تو کیا ویکسین لگوانی چاہیے ؟

اگر آپ کووڈ 19 سے متاثر ہو چکے ہیں تو پھر بھی جب آپ کو پیش کش کی جائے تو آپ کو ویکسین لگوانی چاہیے۔ کووڈ 19 کے ہونے کی صورت میں جو حفاظت آپ کو حاصل ہوتی ہے، اس کا ہر فرد پر انفرادی اثر ہوتا ہے اور اس کے بارے میں کوئی وضاحت موجود نہیں ہے کہ قدرتی انفیکشن سے مدافعت کتنا عرصہ جاری رہ سکتی ہے۔

کیا کووڈ 19 ویکسین محفوظ ہے ؟

کووڈ 19 ویکسین محفوظ ہے اور آپ کو شدید کووڈ 19 بیماری سے محفوظ کرتی ہے جن میں ہسپتال میں داخلہ اور فوتگی بھی شامل ہیں۔ تمام کووڈ 19 ویکسین کی حفاظت کے لیے سخت اقدامات کئے گئے ہیں۔ کووڈ 19 ویکسین کی حفاظتی ضروریات یورپی یونین کی کسی بھی دوسری ویکسین جیسی ہی ہیں۔ حفاظت اور تاثیر کے طریقہ کار کا کووڈ 19 ویکسین کے تیزترین افتتاح کے باعث قطعا نظرانداز نہیں کیا گیا۔ بین الاقوامی یورپی یونین کے ساتھ ساتھ قومی طبی ( ای یو ) یونین کے حکام کی منظوری سے پہلے، ہر قسم کی ویکسین جو آپ کو فراہم کی جاتی ہے وہ کلینیکل تحقیقات سے گزر چکی ہو گی تاکہ یقین ہو سکے کہ یہ ہر ایک کے لئے محفوظ ، موثر اور موزوں ہے۔

ابھی تک یونان میں تین ملین ویکسین کووڈ 19 سے زیادہ افراد کو دی جا چکی ہے اور ایک ارب کو دنیا بھر میں پہلی خوراک مل گئی ہے اور سنگین ضمنی اثرات جیسے الرجک ردعمل یا جمنے کے مسائل، بہت کم ہوتے ہیں۔ ہم سب کو کووڈ 19 انفیکشن کا خطرہ ہے اور یہ خطرہ ان بہت ہی نایاب واقعات کے خطرے سے زیادہ بڑھ کر ہے۔ باقی تمام ویکسینوں کی طرح کووڈ 19 ویکسین کے استعمال میں خاص خیال رکھا جاتا ہے تاکہ یہ ان سب کے لیے محفوظ رہے جو اسے وصول کر رہے ہیں۔

کیا کووڈ 19 ویکسین ضمنی اثرات پیدا کرتی ہے ؟

باقی کسی بھی ویکسین کی طرح کووڈ 19 ویکسین بھی ضمنی اثرات پیدا کر سکتی ہے، جن میں سے زیادہ تر مدھم یا معتدل ہوتے ہیں اور کچھ ہی دن میں چلے جاتے ہیں۔ کچھ افراد کو اس کے مضر اثرات نہیں ہوتے اور کچھ افراد نے عام مضر اثرات کی شکایت کی ہے جیسے کہ ٹیکے کے گرد سوجن، لالی اور درد، بخار، سردرد، تھکاوٹ، پٹھوں میں درد، کپکپاہٹ اور متلی۔ طبی عملہ آپ کو 15 – 30 منٹ وہیں انتظار کرنے کا کہے گا تاکہ ویکسین کے بعد آپ کا ردعمل دیکھا جا سکے۔

ویکسین لگنے کے بعد مضر اثرات کا مطلب یہ ہے کہ ویکسین آپ کے جسم میں حفاظت ( قوت مدافعت ) پیدا کر رہی ہے اور کام کر رہی ہے۔ اگر علامات بدتر ہو جائیں یا تشویش ہو تو اس کی تشخیص کے لئے معالج یا طبی عملے سے مشورہ کرنے کی صلاح دی جاتی ہے۔ کسی بھی مسلسل یا نئے ہونے والے مضر اثر کی شناخت کے لئے دنیا بھر میں ماہر حکام مسلسل ویکسین کے اثرات کی جانچ پڑتال کرتے رہتے ہیں۔ یہ نوٹ کرنا ضروری ہے کہ کووڈ 19 وائرس کے خلاف،  حفاظت کے سامنے مضر اثرات کے امکانات بہت کم ہیں۔

طویل مدتی ضمنی اثرات:

ضمنی اثرات عام طور پر کووڈ ویکسین حاصل کرنے کے پہلے چند دنوں میں ہی ہوتے ہیں۔ سنگین ضمنی اثرات جن کی وجہ سے کوئی طویل مدت مسائل صحت ہوں، کے امکان بہت کم ہیں۔ ہر ویکسین بشمول کووڈ 19 ویکسین کی دنیا بھر میں تقسیم اور مزید جانچ پڑتال سے پہلے وسیع پیمانے پر مضر اثرات کے لئے طبی طور پر جانچ پڑتال کی جاتی ہے۔

مجھے کون سی ویکسین لگوانی چاہیے ؟

آپ کو وہی ویکسین لگوانی چاہیے جس کی آپ کو پیش کش کی گئی ہے۔ تقسیم کی جانے والی ہر ویکسین نے حفاظت اور تاثیر کے معیار کو پورا کیا ہے۔

کیا ہم ویکسین کے بعد احتیاطی تدابیر اختیار کرنا چھوڑ سکتے ہیں ؟

کووڈ 19 سے مکمل حفاظت دوسری خوراک ( زیادہ تر ویکسینز کے لیے ) اور واحد خوراک ( صرف جانسن اور جانسن کے لیے ) کے 21 دن کے آس پاس ہوتی ہے۔ اس مدت سے پہلے، ابھی بھی وائرس سے متاثر ہونا ممکن ہے لہذا ویکسینز کے درمیان اور آپ کے ویکسین لینے کے بعد سماجی فاصلاتی اقدامات پر عمل کرنا بہتر ہے۔

 21 دن بعد بھی کووڈ 19 ویکسین آپ کو بیماری سے بچائے گی، لیکن ضروری نہیں ہے کہ وہ آپ کو دوسرے افراد کو متاثر کرنے سے روک سکے۔ سب کو ویکسین لگنے میں کچھ عرصہ لگ سکتا ہے، لہذا یہ ضروری ہے کہ کووڈ 19 سے حفاظت کے اقدامات ( ماسک،  حفظان صحت، معاشرتی فاصلے ) پر عمل پیرا رہیں۔ سردیوں کے دوران جب لوگ گھر کے اندر زیادہ سے زیادہ وقت گزارتے ہیں تو، بہتر ہے کہ ہوا کی گردش کی جائے مثلا کثرت سے کھڑکیاں کھولی جائیں۔

میں ویکسین کیسے حاصل کر سکتا ہوں ؟

  1. وہ لوگ جو سرکاری رہائش گاہ پر نہیں رہ رہے ( مثلا شہری علاقے میں رہ رہے ہیں، خود کی رہائش گاہ ) ۔

قومی ویکسینیشن مہم کا 18 سال سے اوپر کی عمر کے ہر فرد کو ویکسین لگانے کا ارادہ ہے ۔

ویکسین سب کے لیے مفت ہے ۔ ویکسینیشن کا انتظام عمر کے گروہوں کے مطابق کیا گیا ہے،  شعبہ جات جیسے کہ شعبہ صحت میں فرنٹ لائن ورکرز، یا وہ افراد جن کی صحت کے ساتھ مخصوص مسائل ہیں۔

ویکسینیشن کے اہل نئے گروہوں کا اعلان بتدریج کیا جاتا ہے: اندازہ کے مطابق جون کے درمیان تمام عمر کے گروہوں کے لئے ویکسینیشن پلیٹ فارم کھل جائے گا۔ ویکسینیشن اختیاری ہے لیکن انفرادی اور اجتماعی صحت کی حفاظت کے لیے اسے لازمی سمجھا جاتا ہے۔ کووڈ 19 کے خلاف قومی ویکسینیشن مہم پلان یہاں موجود ہے ( صرف یونانی زبان میں ) ۔

https://emvolio.gov.gr/diadikasia-emvoliasmou

آپ صرف تب ہی اپنی ویکسینیشن کا وقت مقرر کروا سکتے ہیں جب ویکسینیشن کے لئے آپ کی عمر کے گروہ کا اعلان ہو گا۔ حالیہ مدت کے دوران، درج ذیل گروہ ہی ویکسینیشن کے اہل ہیں :

1۔ شعبہ صحت اور تعلیم کے ملازمین کے لئے۔

2۔ 30 سال سے زائد عمر کے لوگوں کے لیے۔

3۔ خطرناک طبی امراض کے افراد مثلا پیوند کاری، خراب گردے، زیر علاج کینسر والے ( یکم جنوری 2019 سے زیر علاج کینسر والے ) یا خون سے متعلق کینسر والے ( وہ افراد جن کے خون سے متعلق کینسر کی تشخیص یکم جنوری 2016 سے ہوئی ) ، شدید دائمی سانس کی بیماری، شدید دل یا جگر کی بیماری مصنوعی امتناعی، ( آٹو انفلیمیٹری / خود کار بیماری اور مصنوعی امتناعی یا منایات علاج سے متعلق دیگر بیماریاں ) ، دیگر بیماریاں ( جیسا کہ ڈائون سنڈروم یا متعلقہ ڈاکٹر کی طرف سے خاص درخواست کے بعد )۔

4۔ وہ لوگ جو درمیانہ یا شدید درجے کے مصنوعی امتناعی یا خود کار بیماری کے جراثیم لیتے ہیں یا پھر شدید خطرناک امراض میں مبتلا ہیں جیسا کہ دائمی امراض قلب، شوگر والے، موٹاپا،  دائمی امراض سانس، کینسر ( مندرجہ بالا درجہ میں شامل نہ ہونے کی صورت میں ) مصنوعی امتناعی،  ایڈز کا انفیکشن،  دائمی امراض گروہ یا جگر، ھیموگلوبینوپیتھی، دوسرے خون کے امراض،  عوارض کا غیر معمولی ہونا، پرانے اعصابی امراض، شدید نفسیاتی مرض، شدید معذوری،  مزید وہ والدین ( یا بچوں کے ) نگران، ان بچوں کے ( نگران ) جو شدید امراض میں مبتلا ہیں،  اور ان بچوں کی عمریں 16 سال سے کم ہیں۔

اگر آپ کو یقین ہے کہ آپ کا شمار درجہ تین یا چار میں ہے، تو آپ کا شمار درجہ تین یا چار میں ہے، تو آپ کو زیادہ معلومات مندرجہ ذیل ویب سائٹ سے یونانی زبان میں مل سکتی ہیں:

https://emvolio.gov.gr

یا کسی ڈاکٹر، دواساز یا سماجی کارکن سے مشورہ لے سکتے ہیں۔

آپ کس طرح چیک کر سکتے ہیں کہ اگر آپ کا تعلق ان گروہوں سے ہے جن کے لیے ویکسین شروع ہو چکی ہے ؟

  • آپ اپنا آمکا ( سوشل سیکورٹی نمبر ) اور اے ایف ایم ( ٹیکس نمبر ) یا اپنا خاندانی نام اس لنک پر ڈال کر درج کریں۔
  • آپ نزدیکی دوا کی دکان یا کیپ سے رابطہ کر کے بھی چیک کر سکتے ہیں کہ ویکسین کے اہل ہیں یا نہیں۔
  • اگر آپ کا تعلق اس گروہ سے ہے جو ابھی ویکسین لگوا رہے ہیں تو آپ ایس ایم ایس کے ذریعے میسج آمکا ( خالی جگہ ) خاندانی نام 13034 پر بھیج کر چیک کر سکتے ہیں ۔

آپ اپوآئنٹمنٹ کس طرح لے سکتے ہیں ؟

یونان میں ویکسین حاصل کرنے کا بنیادی طریقہ کار یہ ہے کہ آپ سروس سنٹر ( کیپ ) یا کسی فارمیسی یا سرکاری ویکسینیشن پلیٹ فارم    https://emvolio.gov.gr  کے ذریعے حاصل کر سکتے ہیں۔

آپ کو ویکسین کے لیے کوئی بھی رقم ادا نہیں کرنی کیونکہ کووڈ 19 ویکسین سب کے لیے مفت ہے۔

  • اگر آپ کے پاس آمکا یا پائیپا ہے اور آپ کو یقین ہے کہ آپ کا تعلق حالیہ ویکسین لینے والے گروہ سے ہے تو آپ کسی دوا کی دکان یا کیپ میں بک کروا سکتے ہیں ۔ آپ کو اپنا آمکا یا پائیپا نمبر درکار ہو گا۔  
  • اگر آپ کے پاس آمکا یا پائیپا، ٹیکس نمبر ( اے ایف ایم ) اور ٹیکسز نیٹ کا یوزر نیم اور پاس ورڈ  ہے، تو آپ   https://emvolio.gov.gr  کے  پلیٹ فارم کے ذریعے اپنی اپوآئنٹمنٹ بک کروا سکتے ہیں ۔ یونانی زبان میں مزید معلومات یہاں سے حاصل کریں ۔
  • اگر آپ کے پاس آمکا یا پائیپا نہیں ہے تو آپ ایک عارضی آمکا نمبر ( پامکا ) لے کے ویکسین لگوا سکتے ہیں ۔ براہ کرم https://www.amka.gr/AMKAGR/#  کی سائٹ پر جا کر ہدایات کی پیروی کرکے دیکھیں کہ آپ کا پامکا جاری ہوا کہ نہیں ۔ آپ کو کسی مدد کی ضرورت ہے تو آپ Refugee Info Facebook page   پر میسج کر سکتے ہیں ۔ 
  • ·       15 سے 17 سال کے بچوں کے اندراج کے لیے، والدین، جن کا تعلق اسی خاندانی گروہ سے ہو، میں سے کسی ایک کے ٹیکسز نیٹ کوڈ کے ذریعے اندراج کروا سکتے ہیں ۔ آپ آن لائن، فارمیسی یا کیپ کے ذریعے اپنا وقت مقرر کروا سکتے ہیں ۔ ضروری ہے کہ بچے اپنے والدین یا سرپرست کے ہمراہ ہی اپنے مقررہ وقت پر ویکسینیشن کے لئے آئیں ۔

آپ اپوآئنٹمنٹ کس طرح لے سکتے ہیں ؟

اپوآئنٹمنٹ طے کروانے کے لئے تفصیلی معلومات یہاں سے حاصل کی جا سکتی ہیں :

https://static.help.unhcr.org/wp-content/uploads/sites/6/2021/06/24124823/emvolio_platform_presentation_vfinal-word-urdu.docx

اپنے طے شدہ اپوآئنٹمنٹ والے دن، آپ کو چاہیے کہ آپ ویکسینیشن سنٹر بروقت پہنچنے کا انتظام کر لیں ( کم از کم طے شدہ وقت سے 15 منٹ پہلے ) ، تاکہ بآسانی ویکسینیشن کی کاروائی ہو جائے اور کوئی بھی تاخیر نہ ہو ۔ طے شدہ وقت والے دن کے بارے میں مزید معلومات یہاں سے حاصل کی جا سکتی ہیں ۔

https://emvolio.gov.gr/instructions

2۔ وہ افراد جو سرکاری رہائش گاہ میں رہ رہے ہیں ( ایوروز اور جزائر میں موجود استقبالیہ اور شناختی مراکز ( آر آئی سی ) ، مرکز میں موجود کھلی استقبالیہ سہولیات ) ۔

قومی ویکسینیشن منصوبہ ہے کہ 18 سال سے اوپر کے ہر فرد کو ویکسین لگائی جائے۔

حکومت نے اعلان کیا ہے کہ ایوروز اور جزائر میں موجود استقبالیہ اور شناختی مراکز ( آر آئی سی ) میں رہنے والے افراد کے ساتھ ساتھ مرکز میں موجود کھلی استقبالیہ سہولیات کے لیے بھی ایک مخصوص ویکسینیشن کا منصوبہ ہو گا ۔

آپ کو ای او دی  یا انتظامیہ کی طرف سے اطلاع مل جائے گی کہ آپ کووڈ 19 کے خلاف ویکسین کب لگوا سکتے ہیں ۔

میں مزید معلومات / مدد کہاں سے لے سکتا ہوں ؟

کووڈ 19 اور ویکسینیشن کے بارے میں معلومات مختلف ذرائع سے حاصل کی جا سکتی ہیں ، جن میں سے زیادہ تر درج ذیل ہیں:

  • ویب سائٹس :
  • قومی ادارہ صحت عامہ https://eody.gov.gr/en/covid-19 | یونانی اور انگریزی زبان میں دستیاب ہے۔
  • ویکسینیشن کی قومی مہم   https://emvolio.gov.gr/
  • یو این ایچ سی آر کی مدد ویب سائٹ:   https://help.unhcr.org/greece/
  • ریفیو جی ۔ انفو :  |   https://www.refugee.info/greece     انگریزی، فرانسیسی، عربی، فارسی، اردو زبان میں دستیاب ہے .<ہیلپ لائنز :
  • قومی ادارہ صحت عامہ ( ای او دی ) :   2105212000 30+  یا  1135  | 7/24 انگریزی اور یونانی زبان میں دستیاب ہے ۔
  • ریفیو جی ۔ انفو فیس بک میسنجر | https://refugee.info/greece   : انگریزی، فرانسیسی، عربی،  فارسی، اردو زبان میں دستیاب ہے ۔
  • یونانی ریڈ کراس ( ایچ آر سی ) ۔ ملٹی فنکشنل سنٹر ( ایم ایف سی ) :

( لینڈ لائن )    2105140440  30+   یا   ( واٹس ایپ / وائبر )    6934724893 30+

پیر- جمعہ ۔ صبح 9 بجے سے شام 8 بجے تک |  یونانی، انگریزی، عربی، فارسی / دری، پشتو، روسی، فرانسیسی، سواہلی، کنیاروندا، کروندی، ترکی، اردو، منڈنگو، مالنکے، سوسو، فولا اور کسی زبان میں دستیاب ہے ۔

  • یونانی کونسل برائے ریفیو جی ( جی سی آر ) ہیلپ لائن :

شیڈول کے لیے یہاں دیکھیے :

https://www.gcr.gr/media/k2/attachments/GCR_HELPLINE_ENGLISH.pdf

  • ذاتی طور پر :

•  کھلی رہائش گاہیں اور آر آئی سی : این پی ایچ او ( ای او دی ) میدانی عملہ ۔

 • آپ ہمیشہ اپنے ڈاکٹر سے مشورہ کر سکتے ہیں، یا پھر کوئی بھی خاص ڈاکٹر جو آپ کی رہائش گاہ کے نزدیک ہو ۔

*** 18 سے 25 سال کے افراد جن کا آمکا ہو اور انہیں ویکسین بھی لگ گئی ہو وہ آزادی پاس کی درخواست دینے کے اہل ہیں، 50 یورو مالیت کا ایک ڈیجیٹل کارڈ جو مخصوص یونانی سیاحتی کمپنیوں اور ثقافتی شعبہ میں استعمال کیا جا سکتا ہے ۔ مزید معلومات اوردرخواست دینےکےلئےیہاں دیکھیے   https://emvolio.gov.gr/freedompass***

خرافات اور افواہوں کو کس طرح دور کیا جائے ؟

کووڈ 19 اور ویکسینز کے بارے میں بہت سی افواہیں اور خرافات موجود ہیں ۔ انٹرنیٹ پر ویکسین کے بارے میں معلومات پر غور کرنے سے پہلے چیک کر لیں کہ معلومات قابل اعتماد وسیلہ سے آئی ہیں اور مستقل بنیاد پر تجدید کی جا رہی ہے ۔ ان کو تلاش کرنے میں آپ کی مدد کے لئے، عالمی ادارہ صحت نے دنیا بھر میں بہت ساری ویب سائٹس کا جائزہ لیا اور تصدیق کی ہے جو صرف معتبر تکنیکی ماہرین کے ذریعے قابل اعتماد سائنسی ثبوتوں اور آزاد جائزوں پر مبنی معلومات فراہم کرتی ہیں ۔ یہ تمام ویب سائٹس ویکسین سیفٹی نیٹ کی رکن ہیں ۔